Home / Archives / گوادر: پانی بحران پر دھرنا چھٹے روز جاری، کوئٹہ میں‌ مظاہرہ

گوادر: پانی بحران پر دھرنا چھٹے روز جاری، کوئٹہ میں‌ مظاہرہ

پانی بحران پر دھرنا چھٹویں روز بھی جاری، میرین ڈرائیوبلاک، گوادر پورٹ جانےوالے ہیوی گاڈیوں کی قطایں لگ گئیں. آمدورفت معطل.

تفصیلات کے مطابق آل پارٹیز اور کونسلران کا دھرنا چھٹویں روز بھی جاری رہا. شرکاء نے فاضل چوک سے احتجاجی ریلی نکال کر ملاموسیٰ موڈ کو بندکرکے دھرنا دیا. ریلی کے شرکاء نے انتظامیہ کے خلاف نعرے لگائے اور گوادر کو پانی دو کا مطالبہ کرتے ہوئے میرین ڈرائیو سڑک پہنچے اور وہاں دھرنا دیا. جس سے گوادر پورٹ روڈ مکمل بندرہا اور پورٹ جانے والی گاڑیوں کی قطاریں لگ گئیں.گوادر کے طلباءکی بڑی تعداد نے دھرنے میں شرکت کی.

دھرنے سے خطاب کرتےہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ ترقی و خوشہالی کا دعویٰ کرکے حکومت گوادریوں کوبنیادی حقوق سےدستبردار کرنے کی سازش کررہی ہے جس کی واضح مثال یہاں خود ساختہ پانی بحران ہے جو حکومتی منصوبوں میں شامل نہیں ہے.

انہوں نے کہا کہ غریب عوام کو وی آئ پیز کے نام سے تنگ کیا جارہا ہے تاکہ لوگ نقل مکانی پر مجبور ہوجائیں لیکن ہم یہاں کےعوامی حقوق سےہرگز دستبردار نہیں ہونگے. تمام تر قوتوں کا مقابلہ کرکے اپنی بقاء کی جنگ لڑیں گے اور گوادر کو بچائیں گے.

مقررین کا مذید کہنا تھا کہ ملک کے ہرنئے وزیراعظم اپنے دور میں یہاں ایکسپریس وے کا سنگ بنیادرکھ کر عوام کو دھوکہ دینے کی کوشش کرتا ہے لیکن کوئی بھی تعلیمی ادارے کا سنگ بنیاد نہیں رکھتا. انہوں نے کہا کہ حکومت اور انتظامیہ ہمیں مجبور کررہی ہے کہ سخت احتجاج کریں جب عوام کا سیلاب نکلے گا تو حالات ہاتھ سے نکل جائیں گے.

مقررین میں بلوچستان نیشنل پارٹی مینگل کے مرکزی کسان و ماہیگیر سیکریٹری ڈاکٹر عزیز بلوچ، ضلعی جنرل سیکریٹری عبدالجبار، بلدیہ گوادرکے وائس چئیرمین حاجی مولابخش، نیشنل پارٹی کے ضلعی صدر فیض نگوری، تحصیل نائب صدر حفیظ حفیظ جعفر، بی این پی عوامی کے رہنماء رؤف شہزاد، جماعت اسلامی کے نائب امیر سعیداحمدبلوچ، پاکستان پیپلزپارٹی مکران کے علی گل بلوچ، کونسلر حمیدلال، مولانا حمیدانقلابی، طالبعلم رہنماء بالاچ قادِر، ولیدمجید، نصیراحمد نگوری، زبیراحمدکلانچی، جواد بلوچ و دیگر شامل تھے.

علاوہ ازیں اہلیان گوادر کے زیر اہتمام جماعت اسلامی کے صوبائی جنرل سیکرٹری ہدایت الرحمان بلوچ کی قیادت میں گوادرمیں پانی کی قلت کے خلاف پریس کلب کوئٹہ کے سامنے ’’احتجاجی مظاہرہ ہوا‘‘ مظاہرے میں نوجوانوں نے کثیرتعدادمیں شرکت کی شرکاء نے بینر اور کتبے اُٹھارکھے تھے جس پر گوادر کو پانی دو پانی دو ،سی پیک سٹی کو پانی دو پانی دو درج تھے مظاہرین نے حکمرانوں کی نااہلی ،پانی ودیگر سہولیات گوادر کے فراہم نہ کرنے کے خلاف بھر پور نعرے لگائے۔

اس موقع پر جماعت اسلامی کے صوبائی جنرل سیکرٹری ہدایت الرحمان بلوچ،بی ایس اومینگل کے منیر جالب ،بی ایس اوپجار کے حمید بلوچ،جے یوآئی نظریاتی کیک شیر جان بلوچ ،عادل ایڈوکیٹ اوراسماعیل میر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکمرانوں کی غفلت وکوتاہی اور کرپشن کی وجہ سے گوادر کو کربلا نہیں بننے دیں گے ۔گوادر کے عوا م کو میرانی ڈیم سے فی الفور پانی فراہم کیا جائے پانی پلانٹ کو جلد ہی کارآمد بناکر عوا م کو پانی کی سپلائی شروع کی جائیں ۔

Source: haalhawal.com

Share on :
Share

About Administrator

Check Also

گھر میں نظربند کر دیا گیا ہے انتخابی مہم چلانے نہیں دی جا رہی،گزین مری

کوہلو:سابق صوبائی وزیر داخلہ اورپی بی نو کوہلو سے آزاد امیدوار گزین مری نے کہا …

Leave a Reply

'
Share
Share
Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com