Home / Archives / جام بھوتانی اتحاد سے ہمیں کچھ نہیں ملا، اسلم بھوتانی

جام بھوتانی اتحاد سے ہمیں کچھ نہیں ملا، اسلم بھوتانی

حب:قومی اسمبلی کے حلقہ این اے272لسبیلہ گوادرسے آزاد امیدوار و سابق اسپیکر بلوچستان محمد اسلم  بھوتانی کے وندر میں مشاورتی اجلاس منعقد ہوا جس میں حلقہ پی بی50وندر،اوتھل ،بیلہ ،لاکھڑا سے ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی قومی اسمبلی کے حلقہ این اے272سے آزاد امید وار محمد اسلم بھوتانی کو وندر پہنچنے پر ایک بڑے جلوس کی شکل میں مشاورتی اجلاس میں لایا گیا ۔

اس موقع پر مشاورتی اجلاس سے قومی اسمبلی حلقہ این اے272کے آزاد امید وار محمد اسلم بھوتانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جو بھی عوام کی رائے ہوگی اس کو مدنظر رکھ کر فیصلہ کیا جائیگا اور دو دن کی مہلت ہے اس دوران دیکھتے ہیں اتحاد کیلئے کون کون رابطے کرتے ہیں ۔

اس کے بعد حتمی فیصلہ کیا جائیگا سا بق اسپیکر بلوچستا ن اسمبلی محمد اسلم بھوتانی نے کہا کہ2013کے الیکشن میں مرحوم جام محمد یوسف کے وفات کی وجہ سے لوگوں کے دلوں میں ہمدردیوں کی لہر تھی مگر الحمداللہ ہم اپنے حلقے کی نشست اس وقت بھی لانے میں کامیاب ہوئے تھے

انہوں نے کہا کہ اب2013اور2018میں بڑا فرق ہے لوگوں کو سب پتہ ہے کہ پانچ سال میں کتنے لوگوں کو روزگار ملا تو اب عوام کارکردگی دیکھ کر ووٹ دیگی۔

انہوں نے کہا کہ میں جام بھوتانی اتحاد کا آج بھی حامی ہوں مگر اس اتحاد سے ہمیں صرف دینا پڑرہا ہے مل کچھ نہیں رہا میں جام کمال صاحب سے کہتا ہوں کہ اس پر فیصلے پر غور فکر کریں بردباری کا مظاہرہ کرتے ہوئے میرے حق میں دستبردار ہوجائیں اسی کو اتحاد کہتے ہیں یہ کیسا اتحاد ہے کہ صرف لو اور بدلے میں کچھ بھی مت دو.محمد اسلم بھوتانی نے کہا کہ ہمPB50میں سیاسی اتحاد کیلے آپ عوام کے سامنے کھڑے ہیں ۔

آپ لوگوں کی مشاورت کیلئے یہاں آئے ہیں کہ عوام بتائے قومی اسمبلی کی نشست کیلے ہمیںPB50میں کس سے اتحاد کرنا چاہیے ظاہر ہے حالیہ نئی حلقہ بندیوں میں سو یانی کے چند علاقوں سمیت لیاری ہمارے حلقے سے نکل کرPB50میں شامل ہوگئے ہیں جسکی وجہ سے اب اس حلقے میں ہ رے ہزاروں ووٹرز آنے سے ہمارا پوزیشن مضبوط ہوگیا ہے کہ ہم قومی اسمبلی کی نشست کیلے اس حلقے میں کسی بھی سیاسی جماعت یا شخصیت سے سیاسی اتحاد کرسکتے ہیں ۔

مگر اس شرط پر کہ وہ قومی اسمبلی کی نشست پر ہماری حمایت  کرے تو صوبائی اسمبلی کی نشستPB50پر ہم انکی ح یت کرینگے.انہوں نے کہا کہ الحمد اللہ گوادر سے بہت سے لوگوں نے مجھ سے رابطہ کیا ہے ایسے لوگوں نے بھی رابطہ کیا ہے جو مجھے پہلے جانتے بھی نہیں تھے مگر ابھی اپنے مکمل تعاون کی یقین دہانی کرارہے ہیں اور میں انشا اللہ جولائی میں اورماڑہ،پسنی ،جیونی اور گوادر کا دورہ کرونگا

Source: dailyazadiquetta.com

Share on :
Share

About Administrator

Check Also

وزیر اعلی بلوچستان کے معاونین خصوصی کی تقرری بلوچستان ہائیکورٹ میں چیلنج ،حکومت کو نوٹس جاری

کوئٹہ: وزیراعلٰی بلوچستان کے معاونین خصوصی کی تقرری کا قانون بلوچستان ہائیکورٹ میں چیلنج کردیا …

Leave a Reply

'
Share
Share
Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com