Home / Archives / بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ صوبے میں تعلیمی اداروں میں کتابیں فراہمی میں ناکام ، اکثر تعلیمی ادارےتاحال کتابوں کے منتظر

بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ صوبے میں تعلیمی اداروں میں کتابیں فراہمی میں ناکام ، اکثر تعلیمی ادارےتاحال کتابوں کے منتظر

کوئٹہ: بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ صوبے میں کچی سے بارویں جماعت تک1کروڑ کتابیں مفت فراہم کرنے میں ناکام ہو گیا بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ صرف60لاکھ90ہزار کتابیں مہیا کر سکا جبکہ کئی مضامین کے اہم موضوعات بھی شائع نہیں کیئے گئے تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر ایجوکیشن بلوچستان کی جانب سے چیئرمین بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ کو لکھے گئے مراسلے نے محکمے تعلیم کی کارکردگی کا پول کھول دیا مراسلے میں کہا گیا ہے۔

کہ بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ کو گزشتہ برس2اگست کو آگاہ کیا گیا تھا کہ رواں سال کی یکم مارچ تک کچی سے بارویں کلاس تک کی1کروڑ25لاکھ95ہزار10کتابیں چھاپ کر مہیا کی جائیں لیکن چار بار یاد دہانی کے باوجود بلوچستان ٹیکسٹ بک بورڈ صرف60لاکھ90ہزار290کتابیں چھاپ کر مہیا کر سکا جبکہ متعدد کتابوں میں سے23اہم موضوعات شائع نہیں کیئے گئے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ کتابیوں کی عدم فراہمی کی وجہ سے طلباء میں بے چینی پائی جاتی ہے۔

جبکہ محکمہ تعلیم بھی متاثر ہو رہا ہے لہذا صورتحال کی نذاکت کو جانتے ہوئے جلد از جلد کتابیں فراہم کی جائیں تا کہ یہ کتابیں صوبے کے مختلف اضلاع میں تقسیم کی جا سکیں ۔

Source: dailyazadiquetta.com

Share on :
Share

About Administrator

Check Also

India elections 2019: Final round of voting under way in 59 seats

Over 100 million people are eligible to vote in 59 constituencies, including Varanasi represented by …

Leave a Reply

'
Share
Share
Social Media Auto Publish Powered By : XYZScripts.com